ابد

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

اینڈرائیڈ اپلیکیشن اردو انسئیکلوپیڈیا کی اینڈرائیڈ اپلیکشن کا اجراء کر دیا گیا ہے۔ ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے ابھی کلک کریں۔

Urdu Encyclopedia on Google Android


اَبَد {اَبَد} (عربی)

ا ب د، اَبَد

عربی زبان سے اسم مشتق ہے۔ ثلاثی مجرد کے باب سے مصدر ہے۔ اردو میں بلحاظ معنی ظرف زماں ہے۔ سب سے پہلے 1611ء، کو "کلیات قلی قطب شاہ" میں مستعمل ملتا ہے۔

اسم ظرف زماں (مذکر - واحد)

فہرست

[ترمیم] معانی

1. وہ زمانہ جس کی انتہا مستقبل میں نہ ہو، غیر متناہی زمانہ، (عموماً ازل کے مقابل)۔

؎ ازل اس کے پیچھے ابد سامنے

نہ حد اس کے پیچھے نہ حد سامنے، [1]

2. دوام، ہمیشگی۔

؎ وہ ثمر ہو مثمر عمر ابد

کی بیاں تعریف یوں باشد و مد، [2]

3. { تصوف }جس کی انتہا ذات کے لیے نہ ہو، جیسے کہ ابتدا نہیں ویسے انتہا بھی نہیں۔

(مصباح التعرف، 22)

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

endless time, prospective eternity; eternity

[ترمیم] مترادفات

جاوِید، ہَمیشْگی، دَوام، جاوِ دانی،

متضادات

اَزَل،

[ترمیم] مرکبات

اَبَد قَرار، اَبَدُالْآباد، اَبَدُالدَّہْر

[ترمیم] اصطلاحی مطلب

شریف جرجانی لکھتے ہیں: ابد سے مراد مستقبل میں وقت کا لامتناہی دھارا ہے جس کی کوئی انتہا نہیں۔ (التعریفات، ص 5) یہ لفظ ازل کے مقابل لایا جاتا ہے اور ازل سے مراد ماضی میں وقت کا لامتناہی دھارا ہے۔

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( 1935ء، بال جبریل، 172 )
  2. ( 1894ء، اردو کی پانچویں کتاب، اسماعیل، 50 )

[ترمیم] مزید دیکھیں

ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter