ابرو

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

اینڈرائیڈ اپلیکیشن اردو انسئیکلوپیڈیا کی اینڈرائیڈ اپلیکشن کا اجراء کر دیا گیا ہے۔ ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے ابھی کلک کریں۔

Urdu Encyclopedia on Google Android

اردو
اردو نستعلیق رسم الخط میں
برصغیر پاک و ہند کے اکثر علاقوں میں بولی اور سمجھی جانے والی زبان جس کے لغات میں پراکرت نیز غیر پراکرت، دیسی لفظوں کے ساتھ ساتھ عربی فارسی ترکی اور کچھ یورپی زبانوں کے الفاظ بھی شامل ہیں اور جس کی قواعد میں عہد بہ عہد تصرفات اور مقامی اختلافات کے باوجود آریائی اثر غالب ہے۔ (ابتداءً ہندوی یا ہندی کے نام سے متعارف رہی۔

اَبْرُو {اَب + رُو} (فارسی)

فارسی زبان سے اسم جامد ہے۔ پہلوی میں "بُرُوْک اوستائی زبان میں بُرُوَت اور سنسکرت میں بھُرُو مستعمل ہے۔ ایک امکان یہ بھی ہے کہ اردو میں ان زبانوں میں سے داخل ہوا ہو یا پھر اوستائی یا پہلوی سے فارسی زبان کے راستے سے اردو میں آیا ہو۔ البتہ قرین قیاس فارسی ہی ہے۔ 1611ء کو "کلیات قلی قطب شاہ" میں مستعمل ملتا ہے۔

متغیّرات اَبھْرُو {اَبھ + رُو}

اسم نکرہ [1]

جمع: اَبْرُوئیں {اَب + رُو + ایں (ی مجہول)}

جمع غیر ندائی: اَبْرُوؤں {اَب + رُو + اوں (و مجہول)}

فہرست

[ترمیم] معانی

1. آنکھ کے اوپر کی محراب نما ہڈی پر دو طرفہ بالوں کی لکیر، بھوں، بھویں۔

؎ کچھ اشاروں ہی سے کہہ دے تری چتون کے نثار

کس پہ تولے ہوئے تلوار ہے ابرو تیرا، [2]

2. { تصوف } وہ تجلی جو الہام غیبی یا کلام کی صورت میں سالک کے دل پر وارد ہوتی ہے۔ (مصباح التعرف لارباب التصوف، 3)

{ تصوف } صفات الٰہی۔ (مصباح التعرف لارباب التصوف، 3)
{ تصوف } قاب قوسین۔ (مصباح التعرف لارباب التصوف، 3)

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

the eye-brow.

[ترمیم] مترادفات

بھَوں، بھویں، بَرْمان،

[ترمیم] مرکبات

اَبْرُوے کَشِیدَہ

[ترمیم] روزمرہ جات

اَبرو چننا 

بھووں میں افشاں لگانا۔

؎ چنوا کے ابرو مجھ سے وہ کیا ہنس کے فرمانے لگے اس تیغ کے دم کے سدا دکھلائیں گے جوہر بھی ہم، [3]

اَبرو کھنچنا 

ابرو پر بل پڑنا، غصہ آنا۔

؎ کھنچ گئے ابرو ہوئی ترچھی نگاہ میرے دل پر وار جو چاہے کرے، [4]

اَبرو مروڑنا 

ماتھے پر ناگواری، ناپسندیدگی یا غصے سے شکنیں پڑنا، غصہ آنا۔

؎ تیغ ستم سے اس کی کبھو منہ نہ موڑیے سو زخم اگر لگیں تو نہ ابرو مروڑیے، [5]

اَبرو ملانا 

باہم ساز یا رمز کرنا، اشارے کرنا۔

؎ سب سے ملاءو ابرو ہم سے نفاق رکھو اس اپنی دوستی کو بالائے طاق رکھو، [6]

اَبرو ہلانا 

آنکھ سے اشارہ کرنا۔

؎ سر آنکھوں سے کریں سجدہ جدھر ابرو ہلائے وہ جدا کچھ کفر اور اسلام سے مذہب ہمارا ہے، [7]

اَبرو ہلنا 

ابرو ہلانا سے فعل لازم۔

؎ واں ہلے ابرو یہاں پھیری گلے پر ہم نے تیغ بات کا ایما بھی پانا کوئی ہم سے سیکھ جائے، [8]

ابرو چڑھانا 

غصہ آنا، ناگوار گزرنا۔

؎ ابرو چڑھا کے آگے بڑھے شاہِ لافتٰی بھونچال کا سماں نظر آتا تھا جا بجا، [9]

ابرو پر (---پہ) بل (---شکن) آنا / ہونا 

ماتھے پر ناگواری، ناپسندیدگی یا غصے سے شکنیں پڑنا، غصہ آنا۔

؎ منہ پہ کھاتے رہے تلوار برابر دیندار بل نہ ابرو پہ مگر بال برابر آیا، [10]

اَبرو پر (--پہ) بل (-- شکن) پڑنا 

غصہ آنا۔

؎ اس قدر نفرت ہے دشمن کو ہمارے نام سے جب کوئی بولا سخن بل اس کے ابرو پر پڑے، [11]

ابرو پر (-- پہ) بل (-- شکن) ڈالنا 

ابرو پر بل پڑنا سے فعل متعدی ہے۔

"اگر کوئی بدمزاج شخص تعریف کرتا تو ابرو پر بل ڈال کر خاموش ہو جاتے۔"، [12]

ابرو پر(-- پہ) میل آنا 

چہرے سے ناگواری کا اظہار ہونا، ناگوار گزرنا۔

"ہزاروں گالیاں سنتے رہے مگر ان کے ابرو پر میل نہیں آیا۔"، [13]

اَبرو پھڑکانا 

بھوں کو معنی خیز طور پر جنبش دینا، اشارے کرنا

؎ آنکھ کچھ تجھ سے لڑاتا ہے پری رو شیشہ موج صہبا سے جو پھڑکائے ہے ابرو شیشہ، [14]

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( مذکر - واحد )
  2. ( 1927ء، شاد، میخانۂ الہام، 5 )
  3. ( 1840ء، شاہ نصیر، چمنستان سخن، 113 )
  4. ( 1905ء، یادگار داغ، 107 )
  5. ( 1764ء، دیوان زادہ حاتم (ق)6، 3 )
  6. ( 1840ء، نصیر، چمنستان سخن، 159 )
  7. ( 1853ء، دفتر فصاحت، وزیر، 198 )
  8. ( 1854ء، ذوق، دیوان، 204 )
  9. ( 1893ء، ریاض، شمیم، 88:1 )
  10. ( 1915ء، جان سخن، 42 )
  11. ( 1886ء، دیوان سخن، 194 )
  12. ( 1947ء، فرحت، مضامین، 4، 265 )
  13. ( 1924ء، نوراللغات، 228:1 )
  14. ( 1840ء، نصیر، چمستان سخن، 175 )

[ترمیم] مزید دیکھیں

عرض ناشر
لغت کو ممکنہ غلطیوں سے پاک کرنے کی پوری کوشش کی گئی ہے پھر بھی انسان خطا کا پتلا ہے لغت کو مزید بہتر بنانے کے لئے یا لغت کے استعمال میں کسی بھی قسم کی دشواری کی صورت میں admin@urduencyclopedia.org سے رابطہ کریں۔
ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter