ابھارنا

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

اینڈرائیڈ اپلیکیشن اردو انسئیکلوپیڈیا کی اینڈرائیڈ اپلیکشن کا اجراء کر دیا گیا ہے۔ ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے ابھی کلک کریں۔

Urdu Encyclopedia on Google Android

اردو
اردو نستعلیق رسم الخط میں
برصغیر پاک و ہند کے اکثر علاقوں میں بولی اور سمجھی جانے والی زبان جس کے لغات میں پراکرت نیز غیر پراکرت، دیسی لفظوں کے ساتھ ساتھ عربی فارسی ترکی اور کچھ یورپی زبانوں کے الفاظ بھی شامل ہیں اور جس کی قواعد میں عہد بہ عہد تصرفات اور مقامی اختلافات کے باوجود آریائی اثر غالب ہے۔ (ابتداءً ہندوی یا ہندی کے نام سے متعارف رہی۔

اُبھارْنا {اُبھار + نا} (سنسکرت، پراکرت)

اُبھار، اُبھارْنا

پراکرت یا سنسکرت زبان کے لفظ ابھار کے ساتھ نا بطور لاحقۂ مصدر لگایا گیا ہے۔ اردو میں 1813ء کو جسونت سنگھ کے کلیات میں مستعمل ملتا ہے۔ (مجموعہ "پروانہ" میں)

متغیّرات


اُوبھارْنا {اُو + بھَار + نا}

فعل متعدی

فہرست

[ترمیم] معانی

1. سطح سے اوپر اٹھانا، اونچا کرنا۔

؎ بے سود ہے کبر، ہیچ سب مستی ہے

سر مہر اٹھاتے ہیں یاں پستی ہے، [1]

رجوع کریں: اُبھار،

2. پھلانا، تاننا۔

؎ شاخوں پہ پرندے تھے، جھٹکتے ہوئے شہپر

لہروں میں بطیں اپنے ابھارے ہوئے سینے، [2]

3. اکسانا، شہہ دینا، جوش دلانا۔

"مسیحی اسقف میرے خلاف لوگوں کو ابھارتے ہیں۔"، [3]

4. تقویت دینا، سہارا دینا

؎ ہمت جواب دیتی ہے جب راہ عشق میں

کیا کیا ابھارتی ہے تری آرزو مجھے، [4]

5. ترقی دینا، پست یا دبی ہوئی حالت سے نکالنا۔

"اپنی قوت اور کندھے کے زور سے اپنی قوم کو پستی اور ذلت سے نکال کر دنیا میں ابھارا۔"، [5]

6. ترغیب دینا، تحریص دلانا

"بس ان کے ابھار کے پانچ چار پرچے منگوائوں گا اور مزے سے دیکھوں گا۔"، [6]

؎ کسی نے کچھ ان کو ابھارا تو ہوتا

نہ آتے نہ آتے، یہاں آتے آتے

7. اغوا کرنا، بھگا لے جانا، اٹھایا اڑا لے جانا، کھینچ لانا۔

؎ پاوں میں مجنوں کے تو طاقت نہیں اے کودکو

موسم گل کی ہوا تم کو ابھارے شہر سے، [7]

8. پانی کی گہرائی سے سطح پر لانا، اچھالنا، ترانا۔

"ڈوبتی ہوئی ناو کو ابھار لیا۔"، [8]

9. فروغ دینا، چمکانا

؎ جبہ سائی نے ابھارا نور دل کو اس قدر

سنگ در پہ ان کے لودے اٹھی پیشانی مری، [9]

10. نمایاں کرنا، واضح کرنا۔

"امر زیر بحث ابھار کر دکھایا گیا تھا۔"، [10]

11. (اٹکی یا دبی ہوئی چیز کو) نکال پھینکنا، باہر کرنا

؎ چٹکیوں سے بھی تری جی کی کھٹک مٹ جاتی

یوں ہی بیٹھے ہوئے کانٹے کو ابھارا ہوتا، [11]

فعل کی حالتیں

اُبھارْنا {اُبھار +نا}اُبھارْنے {اُبھار +نے} ،

اُبھارْنی {اُبھار +نی}اُبھارْتا {اُبھار +تا} ،

اُبھارْتے {اُبھار +تے}اُبھارْتی {اُبھار +تی} ،

اُبھارْتِیں {اُبھار +تِیں}اُبھارا {اُبھا+را} ،

اُبھارے {اُبھا+رے}اُبھاری {اُبھا+ری} ،

اُبھارِیں {اُبھا+رِیں}اُبھارا {اُبھا+را} ،

اُبھارے {اُبھا+رے}اُبھاریں {اُبھا+ریں(یائے مجہول)} ،

اُبھارُوں {اُبھا+رُوں}اُبھار {اُبھار} ،

اُبھارو {اُبھا+رو(واؤ مجہول)}اُبھارْیو {اُبھار+یو(واؤ مجہول)} ،

اُبھارْیے {اُبھار+یے}

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

To raise up, plump up; to take up, lift; to cause to be unladen, to unlade(a cart or boat); to discharge (cargo), unship; to remove, bear away, carry off, run away with; to steal, kidnap; to rouse, stir up, incite, excite, instigate, induce, persuade; to raise up, place beyond the reach of danger or harm; to save, rescue, deliver from trouble of any kind, release, liberate, set free

[ترمیم] مترادفات

اُکْسانا، تَحْرِیک، نُما، اُٹھانا

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( 1910ء، کلام مہر، سورج نراین، 116:2 )
  2. ( 1940ء، سیف و سبو، 86 )
  3. ( 1919ء، جویاے حق، 292:2 )
  4. ( 1915ء، جان سخن، 198 )
  5. ( 1935ء، چند ہم عصر، 11 )
  6. ( 1924ء، اودھ پنچ، لکھنؤ، 6،44:9 )
  7. ( 1826ء، آتش، کلیات، 172 )
  8. ( 1911ء، محاکمہ مرکز اردو، 16 )
  9. ( 1935ء، عزیز لکھنوی، گلکدہ عزیز، 135 )
  10. ( 1917ء، مکاتیب مہدی، 12 )
  11. ( 1938ء، سریلی بانسری، آرزو، 6 )
عرض ناشر
لغت کو ممکنہ غلطیوں سے پاک کرنے کی پوری کوشش کی گئی ہے پھر بھی انسان خطا کا پتلا ہے لغت کو مزید بہتر بنانے کے لئے یا لغت کے استعمال میں کسی بھی قسم کی دشواری کی صورت میں admin@urduencyclopedia.org سے رابطہ کریں۔
ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter