روح

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

اینڈرائیڈ اپلیکیشن اردو انسئیکلوپیڈیا کی اینڈرائیڈ اپلیکشن کا اجراء کر دیا گیا ہے۔ ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے ابھی کلک کریں۔

Urdu Encyclopedia on Google Android


رُوح {رُوح} (عربی)

روح، رُوح

عربی میں ثلاثی مجرد کے باب سے مشتق اسم ہے۔ اردو میں اصل معنی و ساخت کے ساتھ داخل ہوا۔ سب سے پہلے 1582ء میں "کلمۃ الحقائق" میں مستعمل ملتا ہے۔

اسم نکرہ (مؤنث - واحد)

جمع: رُوحیں {رُو + حیں (ی مجہول)}

جمع استثنائی: اَرْواح {اَر + واح}

جمع غیر ندائی: رُوحوں {رُو + حوں (و مجہول)}

فہرست

[ترمیم] معانی

1. جان، آتما۔

"جہاں ایک طرف تعلیمی سرگرمیوں کی گہما گہمی نظر آتی تھی وہاں دوسری طرف ایک ایسی روح بھی جاری و ساری تھی جس میں اسلامی اقدار کی جھلک نمایاں تھی"۔، [1]

2. کسی چیز کا جوہر، ست، خلاصہ۔

؎ روح کیا ساغر میں ڈھالی جائے گی

جان مستوں کی نکالی جائے گی، [2]

3. حضرت جبرائیلؑ۔

"جملہ ملائکہ میں سے ایک بڑا فرشتہ ہے جس کو روح کہتے ہیں"۔، [3]

4. اندرونی خواہش یا نیت، عندیہ و مقصد۔

"مہاتما گاندھی نے اگرچہ ظاہری لڑائی ہار دی تھی لیکن اپنی روح میں .... ہار ماننے سے انکار کر دیا تھا"۔، [4]

5. قوت، توانائی۔

"اس کا نتیجہ یہ تھا کہ ان کا مقدمہ روح اور تاثیر سے خالی اور ایک ضابطہ کی خانہ پری سے زیادہ نہ تھا"۔، [5]

6. { طب } ایک جسم لطیف بخاری ہے جو اخلاطِ محمودہ کی لطافت اور بخاریت سے بطن ایسر یعنی دل کے بائیں بطن میں پیدا ہوتا ہے یعنی جب لطیف خون دل کی بائیں بطن میں آتا ہے اور وہاں آکر مقامی حرارت سے اسکا لطیف حصہ بخار کی صورت میں تبدیل ہوتا ہے اس بخار (بھاپ) کو اطہار روح کہتے ہیں۔ (ماخوذ : مخزن الجواہر)

7. { تصوف } روح، وجہ خاص حق ہے اور کل ارواح اسی کی فروغ ہیں ہر ہر مرتبہ میں حسب استعداد جمادی اور نباتی اور حیوانی اور انسانی کے نام اس کا جدا جدا رکھا گیا اور یہ نزدیک ہے نہ دور نہ یمین میں ہے نہ یسار میں اور نہ تخت میں اور نہ فوق میں بلکہ ہر دو عالم میں وہ ظاہر ہے۔ (مصباح التعرف)

8. وحی، اللہ کا حکم و امر، قرآن، پیغامِ خداوندی۔ (المنجد)

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

soul, spirit

[ترمیم] مترادفات

جان، آتُما، پَران، جی، دَم، نَفَس، سَت، جَوہَر، خُلاصَہ، نِیَت، فَرِشْتَہ، فَلَک، تَت، سِپْرِٹ، حَیات،

[ترمیم] مرکبات

رُوحُ الْاِجْتِماع، رُوحُ الْاَرْواح، رُوحُ الْخَمْر، رُوحُ اللّٰہ، رُوحِ آسُورَہ، رُوحِ بِیش، رُوح پُرْ فُتُوح، رُوحِ نَفْسانی، رُوح و رَواں، رُوحِ تارْپِیں، رُوحِ تُوتِیا، رُوح حَیوانی، رُوحِ خَبِیث، رُوحِ رَبّانی، رُوحِ رَواں، رُوحِ سَیلانی، رُوح فَرْسا، رُوح کی غِذا، رُوحِ مِثالی، رُوح مُدْرِکہ، رُوحِ مَعادِن، رُوحِ مُقامی، رُوح مُقِیم، رُوح مُکَرَّم، رُوحِ نَباتی، رُوح اَفْزا، رُوحُ الْاَمِین، رُوحُ الْقُدُس، رُوحُ اللہ، رُوحِ اِنْسانی، رُوح پَرْوَر، رُوحِ عَصْر، رُوحِ مُجَرَّد

[ترمیم] روزمرہ جات

روح تازہ کرنا 

دل کو بے انتہا خوشی ہونا، بے حد فرحت محسوس ہونا۔

"ہم تشنہ کاموں کے حلق میں ذرا ٹپکا دیتے کہ رُوح تازہ ہو جاتی اور جان میں جان آ جاتی"، [6]

روح تڑپنا 

روح کا بے قرار ہونا۔

؎ اسیرِ گور ہو کر کیسی کیسی روح تڑپتی ہے قیامت پر قیامت گزری ہے معیاد سے کیا کیا، [7]

روح دوڑانا 

جان ڈالنا، زندگی اور حرکت پیدا کرنا، تازگی اور فرحت بخشنا۔

"پھول کانپنے لگتے ہیں اور اپنی پنکھڑیوں کو کھول دیتے ہیں.... یہاں تک کہ موسیقی کی مسلسل لہریں ان میں رُوح دوڑا دیتی ہیں"، [8]

روح ڈالنا 

روح پھونکنا، جان ڈالنا، زندگی بخشنا، تازہ دم کرنا۔

؎ ذرا بھی گر لب جاں بخش کا اشارہ ہو تو ڈال دے دمِ خنجر شکار میں رُوح، [9]

روح قبض کرنا۔ 

جان نکال لینا، جسم سے رُوح نکالنا۔

"اور وہی ہے جو رات کو تمہاری روحیں قبض کرتا ہے"، [10]

روح کا وجد کرنا۔ 

دل کا خوشی سے سرشار ہونا، بہت زیادہ خوشی حاصل ہونا، مسرت سے جھومنا۔

"اِدھر اُدھر کوہِ فلک شکوہ، بیچوں بیچ میں جھِیل بڑا لطفِ تماشا دکھاتی ہے اور رُوح وجد کرنے لگتی ہے"، [11]

روح اٹکنا 

دم نکلتے نکلتے رک جانا

؎ خزاں کے آتے ہی بلبل چمن میں مر جاتی پر آشیانہ کی اَٹکی ہے خاوخس میں رُوح، [12]

روح اٹھ جانا 

رغبت نہ رہنا، طبیعت پھر جانا۔

؎ سب سے رُوح اُٹھ گئی تو جب سے ملا اے رنگیں پھرتا چھاتی پہ ہے وہ ساتھ سلاتا تیرا، [13]

روح بہلانا 

روح کا تڑپنا۔ (مہذب اللغات)

روح بے چین ہونا۔ 

بہت بیقراری ہونا، مضطرب ہونا۔

؎ نہ ہوا گو کلام فی مابین رُوح قالب میں ہو گئی بے چین، [14]

رُوح بھاگنا 

متنفر ہونا۔ (نوراللغات)

رُوح بھٹکنا 
رُوح کا جسم سے نکلنے کے بعد گمراہ ہو کر اِدھر اُھر پھرنا، رُوح کا سرگردان ہونا۔

؎ نہ سمجھ وادی مجنوں میں گردباد اسے بھٹک رہی ہے اسی خانماں خراب کی رُوح، [15]

کسی سے ملنے یا کسی چیز کے دیکھنے کو بہت جی چاہتا۔ (نوراللغات)
روح پرواز کرنا (کر جانا) 
جان نکلنا، دم نکلنا، مر جانا۔

"اسی عالم اضطراب میں اس کی رُوح پرواز کر جاتی ہے"، [16]

خوف سے دم نکلنا، کسی سے نہایت ڈرنا، رُعب غالب ہونا۔ (فرہنگ آصفیہ)
روح پڑنا 

جسم میں جان پڑنا۔

رُوح پھونکنا 
جان ڈالنا، زندگی بخشنا، تازہ دم کرنا۔

"یورپ کا ایک ادیب لکھتا ہے کہ زبان ٹوٹے ہوئے ارادوں اور حوصلوں کو جوڑ کر ان میں زندگی اور تازگی کی روح پھونکتی ہے"، [17]

جذبہ پیدا کرنا۔

"ان میں موسیقار بھی ہوتے ہیں اور ڈھولک نواز بھی، جو اپنے کمال فن سے محنت کشوں میں تازہ رُوح پھونک دیتے ہیں"، [18]

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( 1981ء، افکار و اذکار، 24 )
  2. ( 1932ء، بے نظیر، کلام بے نظیر، 169 )
  3. ( 1877ء، عجائب المخلوقات (ترجمہ)86 )
  4. ( 1982ء، آتشِ چنار، 475 )
  5. ( 1953ء، انسانی دنیا پر مسلمانوں کے عروج و زوال کا اثر، 21 )
  6. ( 1975ء، بدلتا ہے رنگ آسماں،203۔ )
  7. ( 1870ء، شرف (آغا حجو)د، 76۔ )
  8. ( 1920ء، روحِ ادب، 130۔ )
  9. ( 1870ء، الماسِ درخشاں، 85۔ )
  10. ( 1921ء، مولانا محمد احمد رضا خان، ترجمہ قرآن عظیم، 217۔ )
  11. ( 1889ء، سیرِکہسار، 34:1 )
  12. ( 1849ء، کلیاتِ ظفر، 36:2۔ )
  13. ( 1935ء، رنگین (دیوانِ رنگین و انشا، 24) )
  14. ( 1868ء، زہرِعشق، 5۔ )
  15. ( 1945ء، کلیات ظفر، 82:1 )
  16. ( 1980ء، محمدتقی میر، 152۔ )
  17. ( 1972ء، ہندی اردو تنازعہ، 314۔ )
  18. ( 1984ء، سندھ اور نگاہِ قدرشناس۔ )

[ترمیم] مزید دیکھیں

ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter