پار 1

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش

اینڈرائیڈ اپلیکیشن اردو انسئیکلوپیڈیا کی اینڈرائیڈ اپلیکشن کا اجراء کر دیا گیا ہے۔ ڈاؤنلوڈ کرنے کے لیے ابھی کلک کریں۔

Urdu Encyclopedia on Google Android

اردو
اردو نستعلیق رسم الخط میں
برصغیر پاک و ہند کے اکثر علاقوں میں بولی اور سمجھی جانے والی زبان جس کے لغات میں پراکرت نیز غیر پراکرت، دیسی لفظوں کے ساتھ ساتھ عربی فارسی ترکی اور کچھ یورپی زبانوں کے الفاظ بھی شامل ہیں اور جس کی قواعد میں عہد بہ عہد تصرفات اور مقامی اختلافات کے باوجود آریائی اثر غالب ہے۔ (ابتداءً ہندوی یا ہندی کے نام سے متعارف رہی۔


پار {پار} (سنسکرت)

اصلاً سنسکرت کا لفظ ہے، سنسکرت سے اردو میں آیا اور بطور اسم، صفت اور متعلق فعل مستعمل ہے۔ سب سے پہلے 1635 کو "سب رس" میں مستعمل ملتا ہے۔

صفت ذاتی (مذکر - واحد)

فہرست

[ترمیم] معانی

1. پرے، ادھر، دوسری جانب۔

"ان کاسن تو ساٹھ سے بھی پار ہے۔"، [1]

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

last, past

متعلق فعل

[ترمیم] معانی

1. آرپار، ادھر سے ادھر؛ طرف۔

؎ آرزو پر ترے انکار نے ڈھائی آفت

سینہ شوق سے اک ناوک غم پار گیا، [2]

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

over, across, on or to the other side, through, beyond

اسم ظرف مکاں [3]

[ترمیم] معانی

1. حد، سرا، چھور۔

"پورا پار غرقاب دریا اسے نہیں پار۔"، [4]

2. وہ جگہ یا بستی جو دریا کے دوسرے کنارے پر ہو۔

؎ پار کا گنج تھا جو شاہ درا

سب نے رہنا وہیں کا جی میں دھَرا، [5]

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

the opposite bank or shore

[ترمیم] مرکبات

پار اِنْتقالی، پار سَنْجوگ، پار مورْچَہ، پارگَت، پار بارْوَری، پارْسَنْجوگ، پارمُنْتَقِلَہ

[ترمیم] روزمرہ جات

پار اترنا 
دریا عبور کرنا، ایک کنارے سے دوسرے کنارے پر جانا۔

"ڈوبتے جہاز صرف ایک شخص کی دانش مندی سے پار اتر گئے ہیں"، [6]

{ تصوف } (کسی مخمصے یا مشکل سے) نجات پانا؛ کامیاب یا سرخرو ہونا، مراد حاصل ہونا۔

؎ پار اترا جو کہ غرق ہوا بحرِ عشق میں وہ داغ ہے جو دامنِ ساحل میں رہ گیا، [7]

مر کر کام تمام ہونا، مر مٹنا۔ (فرہنگ آصفیہ، 457:1)
ٹھکانے لگنا؛ کسی شخص یا چیز کو ایک جگہ سے دوسری جگہ بھیجنا؛ مطلب نکال کر الگ ہو جانا؛ کسی دکھ یا تکلیف سے نکلنا؛ تباہ ہو جانا، بیت جانا، مشکل راستے سے باہر نکلنا؛ فراغت پا جانا، چھٹی ہو جانا، رہائی پا جانا، (مقدمہ جھنجھٹ جواب دہی وغیرہ سے آزاد ہو جانا، گیند کا دیوار پار کر جانا (شبد ساگر، 2961:6)
پار اتروں تو بکری دوں 

جھوٹے وعدے کے موقع پر بولتے ہیں۔ (جامع اللغات: 7:2)

پار کرنا 
کسی دشوار یا وسیع جگہ کی ایک جانب سے دوسری طرف پہنچنا یا پہنچانا۔

"اب تمہیں اختیار ہے چاہے اس کو ڈبو دو چاہے پار کرو"، [8]

انجام بخیر کرنا، کامیاب کرنا، کام پورا کرنا، مقصد حاصل کرنا۔

"چاہے مولا وار کرے یا پار کرے"، [9]

پار کر دینا 
کسی چیز کو چھید کر یا پھاڑ کر دوسری طرف نکل جانا۔

؎ بیکاں پلک کے جوڑ و ابرو و کماں نے آج دل کے سپر سوں تیرنگہ پار کر گئے، [10]

گزار دینا، تیر کرنا، بسر کرنا۔

"ماں نے اپنی بیوگی اور پھر کم سنی کی بیوگی تمہیں دیکھ دیکھ کر پار کر دی"، [11]

چُرا لینا، اڑا لینا، اڑا دینا؛ باقی نہ چھوڑنا۔

؎ ناصری کے بچے نے بیچ دی ہیں سبھی کتابیں کباب و قہوہ کے شوق میں اس نے پار کر دیا، [12]

[ترمیم] فقرات

پار گئے مور ہو آئے 

مسافر گھر واپس آ کر بہت قصے سناتا ہے، جہاندیدہ بسیار گوید دروغ کے موقع پر بولتے ہیں۔ (جامع اللغات، 7:2)

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( 1935ء، آغا حشر، اسیر حرص، 31 )
  2. ( 1926ء، کلیات حسرت، 163:6 )
  3. ( مذکر - واحد )
  4. ( 1635ء، سب رس، 209 )
  5. ( 1810ء، میر، کلیات، 998 )
  6. ( 1935ء، چند ہم عصر، 25۔ )
  7. ( 1846ء، آتش کلیات، 5۔ )
  8. ( 1911ء، پہلا پیار، 88۔ )
  9. ( 1921ء، لڑائی کا گھر، 7۔ )
  10. ( 1745ء، داءود، دیوان، 98۔ )
  11. ( 1926ء، انشائے ماجد، 278:2 )
  12. ( 1926ء، ہفتِ کشور، جعفر طاہر، 41۔ )

[ترمیم] مزید دیکھیں

عرض ناشر
لغت کو ممکنہ غلطیوں سے پاک کرنے کی پوری کوشش کی گئی ہے پھر بھی انسان خطا کا پتلا ہے لغت کو مزید بہتر بنانے کے لئے یا لغت کے استعمال میں کسی بھی قسم کی دشواری کی صورت میں admin@urduencyclopedia.org سے رابطہ کریں۔
ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter