کارخانہ

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش
اردو
اردو نستعلیق رسم الخط میں
برصغیر پاک و ہند کے اکثر علاقوں میں بولی اور سمجھی جانے والی زبان جس کے لغات میں پراکرت نیز غیر پراکرت، دیسی لفظوں کے ساتھ ساتھ عربی فارسی ترکی اور کچھ یورپی زبانوں کے الفاظ بھی شامل ہیں اور جس کی قواعد میں عہد بہ عہد تصرفات اور مقامی اختلافات کے باوجود آریائی اثر غالب ہے۔ (ابتداءً ہندوی یا ہندی کے نام سے متعارف رہی۔

کارخانَہ {کار + خا + نَہ} (فارسی)

فارسی زبان سے ماخوذ اسم کار کے ساتھ فارسی ہی کا اسم خانہ لگانے سے مرکب ہوا۔ اردو میں بطور اسم استعمال ہوتا ہے۔ سب سے پہلے 1611ء کو "کلیات قلی قطب شاہ" میں مستعمل ملتا ہے۔

اسم ظرف مکان (مذکر - واحد)

واحد غیر ندائی: کارخانے {کار + خا + نے}

جمع: کارخانے {کار + خا + نے}

جمع غیر ندائی: کارخانوں {کار + خا + نوں (و مجہول)}

[ترمیم] معانی

1. کام کرنے کی جگہ، چیزوں کے بنانے اور تیار کرنے کا ٹھکانا، صنعتی کام کرنے کی عمارت یا جگہ، کارگاہ، فیکٹری۔

"بارن گھوش .... آپ نے بم تیار کرنے کا کارخانہ قائم کیا تھا۔" [1]

کسی خاص کام کا مقام، جگہ وغیرہ (مشاغل کا) مرکز یا ٹھکانا۔

"ہندوستان ہر لحاظ سے ایک عجیب و غریب مدرسہ اور تجربہ حاصل کرنے کا کارخانہ ہے۔" [2]

2. گودی، گودی کا احاطہ، جہاز باندھنے یا بنانے کی جگہ، ڈاکیا رڈ۔

(انگلش اینڈ ہندوستانی ٹیکنیکل ٹرمز، 101)

{ مجازا } کاروبار حیات کی جگہ۔

"عشق اختیار کرو کہ عشق ہی اس کار خانے پر مسلط ہے۔" [3]

3. نظم و نسق، معاملہ، انتظام نیز محکمہ، شعبہ۔

"جس دن اعتدال فنا ہو گا۔ نظام ارضی کا یہ پورا کارخانہ بھی درہم برہم ہو جائے گا۔" [4]

ادارہ، کمپنی۔

"جو مال ہمارا کارخانہ ولایت سے منگواتا ہے وہ بازار میں کیونکر پہنچتا ہے۔" [5]

4. خانگی معاملات یا انتظامات، خانہ داری، گرہستی۔

"بیٹے بہو کا کارخانہ مرزا نے خود علیحدہ کر دیا تھا۔" [6]

وسائل حیات، کام، دھندا، کاروبار۔

"ایسا لکھ لٹ کارخانہ تو میں نے کسی کا نہیں دیکھا۔" [7]

فعل، امر، تدبیر، کام۔

"شبہ گزرتا ہے کہ اس نے مجھے غافل سوتا سمجھ کر ایسا ایسا کارخانہ کیا۔" [8]

5. خدا کی قدرت، خدا کا کام۔

؎ شان اوس کی یہ اوس کے کارخانے

کیا جلد کرم کیا خدا نے، [9]

6. کوٹھی نیز دکان، سازو سامان، اسباب، اثاثہ۔

"دو اور غزابوں میں منتخب اشیا اور کارخانے لادے اور ان چاروں کو روانہ کیا۔"، [10]

7. { زربافی } زری اور گوٹا بننے کا ٹھکانا نیز وہ تپائی جس پر بیٹھ کر گوٹا کناری بنتے ہیں، اس تپائی پر ایک بیلن لگا ہوتا ہے، جس پر تیار گوٹا لپیٹا جاتا ہے، کار چوب۔

"گوٹا کناری جس چیز پر بیٹھ کر بنتے ہیں، اسے اہل دہلی کارخانہ کہتے ہیں۔"، [11]

8. اندام نہانی، فرج، قَبُل۔ (فرہنگ آصفیہ)۔

[ترمیم] مترادفات

کارگاہ، فَیکْٹَری، دُکان، ڈِپو

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( 1990ء، نگار، کراچی، فروری، 22 )
  2. ( 1913ء، تمدن ہند، 508 )
  3. ( 1989ء، نگار، کراچی، مارچ، 13 )
  4. ( 1932ء، سیرۃ النبیۖ، 291:4 )
  5. ( 1892ء، اصول سراغ رسانی، 235 )
  6. ( 1900ء، شریف زادہ، 63 )
  7. ( 1924ء، خونی راز، 82 )
  8. ( 1842ء، الف لیلہ، عبدالکریم، 299:2 )
  9. ( 1881ء، مثنوی نیرنگ خیال، 23 )
  10. ( 1897ء، بادشاہ نامہ، 113 )
  11. ( 1940ء، آغا شاعر، ارمان، 2 )
عرض ناشر
لغت کو ممکنہ غلطیوں سے پاک کرنے کی پوری کوشش کی گئی ہے پھر بھی انسان خطا کا پتلا ہے لغت کو مزید بہتر بنانے کے لئے یا لغت کے استعمال میں کسی بھی قسم کی دشواری کی صورت میں admin@urduencyclopedia.org سے رابطہ کریں۔
ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter