کاغذ

اردو_لغت سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی, تلاش
اردو
اردو نستعلیق رسم الخط میں
برصغیر پاک و ہند کے اکثر علاقوں میں بولی اور سمجھی جانے والی زبان جس کے لغات میں پراکرت نیز غیر پراکرت، دیسی لفظوں کے ساتھ ساتھ عربی فارسی ترکی اور کچھ یورپی زبانوں کے الفاظ بھی شامل ہیں اور جس کی قواعد میں عہد بہ عہد تصرفات اور مقامی اختلافات کے باوجود آریائی اثر غالب ہے۔ (ابتداءً ہندوی یا ہندی کے نام سے متعارف رہی۔

کاغَذ {کا + غَذ} (عربی)

عربی زبان سے ماخوذ اسم جامد ہے۔ عربی سے اردو میں اصل معنی و ساخت کے ساتھ داخل ہوا اور بطور اسم استعمال ہوتا ہے۔ سب سے پہلے 1564ء کو "دیوانِ حسن شوقی" میں مستعمل ملتا ہے۔

اسم نکرہ (مذکر - واحد)

جمع استثنائی: کاغْذات {کاغ + ذات}

جمع غیر ندائی: کاغَذوں {کا + غَذوں (و مجہول)}

فہرست

[ترمیم] معانی

1. مختلف اشیاء سے کوٹ پیس کر تیار کردہ پتر یا ورق، تاو جس پر لکھتے ہیں۔

"نامیاتی

[ترمیم] مرکبات

.... ربڑ، کاغذ، پلاسٹک اور تالیفی ریشوں کی مختلف صنعتوں میں استعمال ہوتے ہیں۔"، [1]

2. خط، مکتوب۔

؎ مجکو اس شوخ نے لکھ کر نہیں بھیجا کاغذ

نامہ لایا ہے تو پھیر کے میرا کاغذ، [2]

3. تحریر، نوشتہ، پرچہ (لکھا ہوا) نیز اجازت نامہ۔

"ریسٹ ہاؤس کا چوکیدار .... کاغذ کے بغیر اور صاحب کی تحریری اجازت بنا کمرہ کھولنے پر رضامند نہ ہوتا تھا۔"، [3]

4. اخبار

"بیکنگھم صاحب .... نے اپنے کاغذ اورینٹل آبزرور میں ان سب خرابیوں کا حال .... لکھا ہے۔"، [4]

5. اسٹامپ (جس پر تمسک وغیرہ لکھا جاتا ہے)۔

"اگر وہ لوگ کاغذ دست آویز اپنے روپیہ سے خرید لیتے تو غالباً دو تین ہی دنوں میں کاغذ مرتب ہو جاتا۔" [5]

تمسک، دستاویز، قبالہ (جو سند کے طور پر لکھا جائے)اقرارنامہ، کرایہ نامہ، سرخط وغیرہ (اسٹامپ پر یا سادے فارم پر)۔

"نکاح کے کاغذ پہ دولہا کی مہر لوگوں کی گواہیاں ہوئیں۔" [6]

6. (حساب کتاب یا دوسرے ذاتی کاموں کی) فہرست یا فائل وغیرہ، رجسٹر روزنامچہ، بہی کھاتہ وغیرہ نیز اعمال نامہ (بیشتر جمع میں)۔

"مجھے سارے حساب کے کاغذ منگوا دو۔"، [7]

7. ہنڈی، کاغذ، زر، نوٹ۔

(فرہنگ آصفیہ)

[ترمیم] انگریزی ترجمہ

Paper; a paper, writing, document, deed; a charter, patent; an account; a note of hand, a bond; a printed or written sheet, a newspaper

[ترمیم] مترادفات

دَفْتَر، اِسْٹیشْنَری، قِرْطاس، پَتَّر، وَرَق،

[ترمیم] مرکبات

کاغَذِ باد، کاغَذ سا، کاغَذ کاٹ مَشِین

[ترمیم] روزمرہ جات

کاغذ سیاہ کرنا 

لکھنا، (عموماً) بیکار اور بے مصرف لکھنا، نکمی باتیں تحریر کرنا۔

؎ جو حرف چاہتا ہوں لکھ نہیں سکا اب تک زمانہ ہو گیا کاغذ تیاہ کرتے ہوئے، [8]

[ترمیم] ضرب الامثال

کاغذ کی ناءو کب تک بہے گی۔ 

اس ادنٰی چیز سے کب تک گزارہ ہو گا۔

"حکومت کیونکر رہے گی، کاغذ کی ناءو کب تک بہے گی۔"، [9]

[ترمیم] حوالہ جات

  1. ( 1985ء، نامیاتی کیمیا، 10 )
  2. ( 1936ء، شعاع مہر، 43 )
  3. ( 1981ء، سفر در سفر، 47 )
  4. ( 1896ء، سوانحات سلاطین اودھ، 187:1 )
  5. ( 1958ء، شاد کی کہانی شاد کی زبانی، 22 )
  6. ( 1911ء، قصہ مہر افروز، 55 )
  7. ( 1911ء، قصہ مہر افروز، 73 )
  8. ( 1986ء، رات کو جاگے ہوئے، 40 )
  9. ( 1845ء، نغمۂ عندلیب، 8 )

[ترمیم] مزید دیکھیں

عرض ناشر
لغت کو ممکنہ غلطیوں سے پاک کرنے کی پوری کوشش کی گئی ہے پھر بھی انسان خطا کا پتلا ہے لغت کو مزید بہتر بنانے کے لئے یا لغت کے استعمال میں کسی بھی قسم کی دشواری کی صورت میں admin@urduencyclopedia.org سے رابطہ کریں۔
ذاتی اوزار
متغیرات
ایکشنز
رہنمائی
اوزاردان
دیگر شعبہ جات
Besucherzahler brides of ukraine
website counter